سابق صدر آصف علی زرداری عام انتخابات کی حکمت عملی بنانے کے لیے لاہور میں ہی قیام کریں گے۔

پاکستان کے سابق صدر اور پیپلز پارٹی کے شریک چیئرمین آصف علی زرداری پنجاب میں پارٹی کے مسائل پر توجہ مرکوز کرنے اور انتخابی بخار بڑھتے ہی اگلے عام انتخابات کے لیے اسے زندہ کرنے کی کوششوں کے لیے لاہور میں ڈیرے ڈالیں گے۔

میڈیا رپورٹس کے مطابق سابق صدر پیر کو تین روزہ دورے پر لاہور پہنچیں گے جس کا مقصد صوبے میں پیپلز پارٹی کی پوزیشن مضبوط کرنا ہے۔

آصف علی زرداری صوبے میں اقتدار پر پی ٹی آئی-پی ایم ایل-ق کے اتحاد کی گرفت کے خلاف سیاسی قوت کو استعمال کرنے اور انتخابات کے لیے حمایت کو متحرک کرنے کے لیے اتحادیوں کے ساتھ شامل ہونے کی بھی توقع رکھتے ہیں۔

تازہ ترین اطلاعات کے مطابق ان کی مسلم لیگ (ق) کے صدر چوہدری شجاعت حسین سے بھی بات چیت متوقع ہے۔

اپنے دورہ لاہور کے دوران آصف زرداری پنجاب کے امیدواروں کی فہرست کو حتمی شکل دینے کے لیے وزیر اعظم اور دیگر پارٹی رہنماؤں سے ملاقاتیں بھی کریں گے۔ اس کے علاوہ آصف علی زرداری وسطی پنجاب کی سربراہی کے لیے عہدیداروں اور پارٹی رہنما کا انتخاب کریں گے۔

آصف علی زرداری، جو کہ مسلم لیگ (ن) کی زیرقیادت حکمران اتحاد کے اہم اتحادی ہیں، صوبے میں حکمران پی ٹی آئی-پی ایم ایل (ق) اتحاد کے خلاف سیاسی قوتیں بڑھانے کے لیے حکمت عملی بنانے کے لیے اتحادیوں سے بھی مشاورت کریں گے۔ انتخابات کے لئے ووٹ حاصل کریں.

50% LikesVS
50% Dislikes

اپنا تبصرہ بھیجیں