کراچی کو دنیا کا سستا ترین شہر قرار دیا گیا -ڈبلیو سی او ایل انڈیکس رپورٹ

‘ورلڈ وائیڈ کاسٹ آف لیونگ (WCOL) انڈیکس 2022’ رپورٹ میں کراچی کو دنیا کا چھٹا سب سے سستی شہر قرار دیا گیا ہے۔

اکانومسٹ انٹیلی جنس یونٹ (EIU) کے مطابق، گزشتہ سال کے دوران دنیا کے بڑے شہروں میں مہنگائی اوسطاً 8.1 فیصد بڑھ گئی ہے جو گزشتہ 20 سالوں میں سب سے زیادہ ہے۔

WCOL نے دمشق (شام) کو دنیا کے سب سے زیادہ سستی شہر کے طور پر درجہ بندی کیا ہے اس کے بعد طرابلس (لیبیا)، تہران (ایران)، تیونس (تیونس)، تاشقند (ازبکستان) اور کراچی (پاکستان) کا نمبر آتا ہے۔ رپورٹ کے مطابق یوکرین میں جنگ، روس پر مغربی پابندیوں اور چین کی صفر کووڈ پالیسیوں نے سپلائی چین کے مسائل پیدا کیے ہیں، جب کہ مختلف ممالک میں شرح سود میں ریکارڈ اضافے نے قیمتوں میں نمایاں اضافہ کیا ہے۔

‘عالمی زندگی کی لاگت (WCOL) انڈیکس 2022’

اس رپورٹ نے سنگاپور کو دس سالوں میں آٹھویں مرتبہ حاصل کیا، نیویارک (امریکہ) کے ساتھ مل کر دنیا میں سب سے مہنگا اور اس کے بعد تل ابیب (اسرائیل)، ہانگ کانگ، لاس اینجلس، زیورخ (سوئٹزرلینڈ) ٹاپ ٹین ممالک کی فہرست میں۔

رپورٹ کے مطابق سستے ترین ممالک کی فہرست ان ممالک کی کمزور معیشتوں اور کرنسیوں کی عکاسی کرتی ہے۔

تازہ ترین رپورٹ کے مطابق دنیا کے دس سستے ترین شہروں کی فہرست میں ایشیا کا راج ہے۔

سروے، جو 16 اگست سے 16 ستمبر 2022 کے درمیان کیا گیا تھا، اس میں 200 اشیا کی قیمتوں کا پتہ لگانے کا دعویٰ کیا گیا تھا۔ روس یوکرین جنگ کی وجہ سے یوکرین کے دارالحکومت کیف کو اس سال کے سروے سے خارج کر دیا گیا تھا۔

50% LikesVS
50% Dislikes

اپنا تبصرہ بھیجیں