پاک بمقابلہ انگلش ٹیسٹ سیریز کے لیے حارث رؤف کی جگہ حسن علی کا امکان ہے۔

پی سی بی کو توقع ہے کہ حارث رؤف کی جگہ فاسٹ باؤلر حسن علی کو ٹیسٹ ٹیم میں بلایا جائے گا جو کہ کواڈ انجری کے باعث انگلینڈ کی بقیہ سیریز سے باہر ہو گئے ہیں۔

ذرائع کے مطابق ابتدائی طور پر سیریز کے لیے اعلان کردہ 18 رکنی اسکواڈ سے ڈراپ کیے جانے کے بعد پیسر حسن کو ملتان اور کراچی ٹیسٹ کے لیے طلب کرنے پر غور جاری ہے۔

صرف ایک اور تیز گیند باز، محمد وسیم جونیئر، اب بھی آپشنز پر ہیں اور اس نے ابھی ٹیسٹ میں ڈیبیو کرنا ہے۔ انگلینڈ کی جانب سے پہلے میچ میں پاکستان کی نوجوان بولنگ لائن اپ کو کچلنے کے بعد ٹیم انتظامیہ ایک اور ناتجربہ کار کھلاڑی کو منتخب کرنے میں محتاط ہے۔

منگل کو پاکستان کرکٹ بورڈ نے اس بات کی تصدیق کی کہ دائیں ہاتھ کے اسپیڈسٹر حارث راولپنڈی ٹیسٹ کے پہلے دن لگنے والی انجری سے صحت یاب نہیں ہو سکے تھے اور وہ نیشنل ہائی پرفارمنس سنٹر میں اپنی بحالی شروع کرنے کے لیے لاہور جائیں گے۔

اگرچہ حالیہ برسوں میں ان کی فارم میں کمی دیکھنے میں آئی ہے جس نے انہیں سرخ گیند اور سفید گیند دونوں ٹیموں سے باہر کرنے پر مجبور کیا، حسن علی کو پاکستان کے لیے 21 ٹیسٹ کھیلنے کا قابل قدر تجربہ ہے جس میں انہوں نے 24.57 کی شاندار اوسط سے 77 وکٹیں حاصل کیں۔ انہیں 2021 کے لیے پاکستان کا ٹیسٹ کرکٹر آف دی ایئر بھی قرار دیا گیا۔

محمد عباس اب بھی پی سی بی کے لیے ایک آپشن ہیں، لیکن محمد علی کے 188 رنز دینے کے بعد، پاکستان کی جانب سے بلے بازی کے لیے موزوں پچوں پر میڈیم پیسر استعمال کرنے کا امکان نہیں ہے۔

دونوں ٹیموں کے درمیان دوسرا ٹیسٹ جمعہ 9 دسمبر سے ملتان میں شروع ہوگا۔

یہاں یہ بات قابل ذکر ہے کہ ہوم سائیڈ اس وقت تاریخی تین میچوں کی سیریز میں 0-1 سے پیچھے ہے جب انگلینڈ نے ابتدائی ٹیسٹ میں سنسنی خیز جیت پر مہر ثبت کی تھی۔

50% LikesVS
50% Dislikes

اپنا تبصرہ بھیجیں