صدر عارف علوی کی آرمی چیف جنرل عاصم منیر سے آڈیو لیکس کے معاملے پر بات چیت کا امکان ہے۔

صدر مملکت ڈاکٹر عارف علوی نے کہا ہے کہ انہوں نے چیف آف آرمی سٹاف (سی او اے ایس) جنرل عاصم منیر کے ساتھ “آڈیو اور ویڈیو لیکس کے کھیل” پر بات کرنے کا مقصد بنایا ہے۔

“میں حیران ہوں کہ ایسا کیوں ہو رہا ہے۔ اسے اخلاقیات کے کسی بھی لحاظ سے جاری نہیں رہنا چاہیے،” ڈاکٹر علوی نے ہفتے کے روز ایک عشائیے میں صحافیوں، کاروباری برادری کے رہنماؤں اور غیر ملکی سفارت کاروں کے ساتھ ایک وسیع گفتگو کے دوران کہا۔

صدر علوی نے انکشاف کیا کہ سابق آرمی چیف جنرل (ر) قمر جاوید باجوہ اور ان کی ٹیم نے پاکستان تحریک انصاف (پی ٹی آئی) کے چیئرمین عمران خان کی سینیٹ اور انتخابات کے دوران بھی مدد کی۔

صدر نے کہا کہ عمران خان نے جنرل (ر) باجوہ کو برطرف کرنے کا کوئی سوچا نہیں تھا، یہ کہتے ہوئے، “نہیں، مجھے ایسا نہیں لگتا۔ یہ ایک افواہ تھی۔”

صدر نے کہا کہ ہمیں ماضی کو چھوڑ دینا چاہیے اور لوگوں سے جو غلطی ہوئی ہے اسے معاف کر دینا چاہیے، تاکہ ایک نئی شروعات ہو سکے۔

“آئیے ایک ایسا ملک بنائیں جس کے ہم مستحق ہوں،” صدر نے کہا۔ انہوں نے اس بات پر افسوس کا اظہار کیا کہ اداروں نے اپنا کردار ادا نہیں کیا، یہاں تک کہ عدلیہ نے، اس بات کی نشاندہی کرتے ہوئے کہ عدالتوں نے ایک آمر کو آئین میں تبدیلی کی اجازت دینے والے فیصلے دیے۔ انہوں نے ریکوڈک کیس کا حوالہ دیا جس میں پاکستان کو 7 ارب ڈالر کا جرمانہ ادا کرنا پڑا۔

اگر آپ عدلیہ پر تنقید کریں گے تو اس سے پوری عدلیہ کی افادیت کم ہو جائے گی۔ اگر آپ فوج پر تنقید کرتے ہیں تو یہ بدنامی کا معاملہ بن جاتا ہے اور ہم ایسا نہیں چاہتے،‘‘ صدر نے کہا۔ تاہم انہوں نے مزید کہا کہ اس اصول کو اکثر ہر حال میں پھیلایا اور لاگو کیا جاتا تھا جس کی وجہ سے کوئی ان کے خلاف کچھ نہیں کہہ سکتا تھا۔

وزیر خارجہ بلاول بھٹو زرداری کے بھارت کو جواب دینے پر گفتگو کرتے ہوئے ڈاکٹر علوی نے ریمارکس دیے کہ وزیر خارجہ نے درست کام کیا۔ انہوں نے کہا کہ دنیا اور عالمی نظام ذاتی مفادات پر مبنی ہے۔ انہوں نے کہا کہ بلاول صاحب نے اچھا جواب دیا۔

50% LikesVS
50% Dislikes

Author

  • Muhammad Amir

    Muhammad Amir is working with Burj News as Senior Writer

    https://urdu.burjnews.com/author/mamirsalarzai/ mamirsalarzai@urdu.burjnews.com Amir Muhammad

اپنا تبصرہ بھیجیں