نیو ایئر نائٹ سے قبل وفاقی دارالحکومت کی سیکیورٹی مزید سخت کر دی گئی۔

قانون نافذ کرنے والے اداروں نے نیو ایئر نائٹ کے لیے اسلام آباد بھر میں سیکیورٹی کے سخت انتظامات کیے ہیں۔

تفصیلات کے مطابق دارالحکومت کی انتظامیہ نے اسلام آباد بھر میں حفاظتی اقدامات مزید سخت کرتے ہوئے 31 دسمبر 2022 کی شام 6 بجے سے یکم جنوری 2023 کی صبح 2 بجے تک ڈبل سواری پر پابندی عائد کر دی ہے۔

اسلام آباد پولیس نے تمام زونل افسران اور قریبی تھانوں کو اپنے اپنے علاقوں میں رہنے اور نئے سال کے موقع پر سخت حفاظتی اقدامات کو یقینی بنانے کی ہدایت کی ہے۔

رپورٹس کے مطابق نئے سال کے موقع پر وفاقی دارالحکومت کے داخلی اور خارجی راستوں سمیت مختلف حساس مقامات پر پولیس اور رینجرز کے 3 ہزار سے زائد اہلکار تعینات کیے گئے تھے۔

وفاقی دارالحکومت میں بھی سیکیورٹی بڑھا دی گئی، دارالحکومت کی انتظامیہ نے شہر کو ہائی الرٹ کر دیا، عوامی اجتماعات اور جلوسوں پر پابندی عائد کر دی، یہاں تک کہ آئندہ بلدیاتی انتخابات کے لیے مہم بھی جاری ہے۔ پولیس نے شہر بھر میں گاڑیوں کا معائنہ کرنے کے لیے گشت بڑھا دیا ہے اور سنیپ چوکیاں قائم کر دی ہیں۔

دریں اثنا، سندھ حکومت نے نیو ایئر نائٹ جشن سے قبل کراچی میں ڈبل سواری پر پابندی کا نوٹیفکیشن واپس لے لیا۔

اطلاعات کے مطابق وزیراعلیٰ سندھ سید مراد علی شاہ کی ہدایت پر پابندی واپس لی گئی ہے۔ وزیراعلیٰ سندھ مراد علی شاہ نے کہا کہ شہر میں امن و امان کی صورتحال بہتر ہوئی ہے اور وہ عوام کو نیا سال منانے سے نہیں روک سکتے۔

وزیراعلیٰ سندھ نے کہا کہ شہر میں تفریحی مقامات پر جانے پر کوئی پابندی نہیں ہے۔

50% LikesVS
50% Dislikes

اپنا تبصرہ بھیجیں