کوئٹہ کی نرس کا الزام ہے کہ انہیں سرکاری ہسپتالوں میں جسم فروشی پر مجبور کیا جاتا ہے۔

کوئٹہ کے ایک سرکاری ہسپتال کی ایک نرس نے الزام لگایا کہ نرسوں کو جسم فروشی پر مجبور کیا جا رہا ہے۔

ایک نرس کی جانب سے محکمہ صحت کے سیکرٹری اور دیگر حکام کو خط لکھا گیا جس میں بتایا گیا کہ سرکاری ہسپتالوں میں نرسوں کو جسم فروشی پر مجبور کیا جا رہا ہے۔

خط میں اسپتال کے انتظامی عملے کی جانب سے نرسوں کو بلیک میل کرنے کی شکایت کی گئی ہے۔

سیکرٹری صحت بلوچستان کا کہنا تھا کہ خط میں کسی نرس کا نام نہیں ہے تاہم اس کو مدنظر رکھتے ہوئے معاملے کی تحقیقات کے لیے انکوائری کمیٹی بنائی گئی ہے۔

50% LikesVS
50% Dislikes

Author

  • Muhammad Amir

    Muhammad Amir is working with Burj News as Senior Writer

    https://urdu.burjnews.com/author/mamirsalarzai/ mamirsalarzai@urdu.burjnews.com Amir Muhammad

اپنا تبصرہ بھیجیں