گورنر پنجاب بلیغ الرحمان نے صوبائی اسمبلی تحلیل کرنے کی سمری پر دستخط کر دیئے۔

معتبر ذرائع کے مطابق گورنر پنجاب بلیغ الرحمان نے ہفتہ کو صوبائی اسمبلی تحلیل کرنے کی سمری پر دستخط کر دیئے۔

گورنر پنجاب نے سمری پر وزیراعلیٰ پنجاب پرویز الٰہی کی ایڈوائس پر دستخط کیے۔ پنجاب اسمبلی کی تحلیل کا نوٹیفکیشن گورنر کی جانب سے وزیر اعظم شہباز شریف سے مشاورت کے بعد جاری کیا جائے گا۔

دو روز قبل وزیراعلیٰ پنجاب پرویز الٰہی نے گورنر بلیغ الرحمان کو سمری بھیجی تھی جس میں ان سے صوبائی اسمبلی تحلیل کرنے کا کہا گیا تھا۔

گورنر کو بھیجے گئے نوٹیفکیشن میں ون لائن ایڈوائس کے ساتھ وزیراعلیٰ پنجاب پرویز الٰہی نے کہا: ’’میں پرویز الٰہی، وزیراعلیٰ پنجاب، یہاں آپ کو صوبائی اسمبلی تحلیل کرنے کا مشورہ دیتا ہوں‘‘۔

پی ٹی آئی نے پنجاب اسمبلی تحلیل کرنے کا مشورہ گورنر کو بھجوا دیا۔

پرویز الٰہی کی عمران سے ملاقات کے بعد میڈیا سے بات کرتے ہوئے پی ٹی آئی کے سینئر رہنما فواد چوہدری نے اعلان کیا کہ پرویز الٰہی نے سمری پر دستخط کر دیے ہیں اور یہ مشورہ گورنر پنجاب کو بھجوا دیا گیا ہے۔

فواد نے یہ بھی کہا کہ خیبرپختونخوا اسمبلی “پرسوں” تحلیل ہو جائے گی۔

اسمبلی کی تحلیل کے حوالے سے ٹویٹ کرتے ہوئے مونس الٰہی نے لکھا

وعدہ پورا کیا۔ عمران خان پی ٹی آئی انشاءاللہ جلد ہی ہم آپ کو دوبارہ وزیر اعظم کی نشست پر دیکھیں گے!!

یہاں ایک بات یاد رکھیں سپیکر پنجاب اسمبلی سبطین خان نے 11 جنوری کو اجلاس کی صدارت کی جس میں پی ٹی آئی رہنما اور رکن پنجاب اسمبلی میاں اسلم اقبال نے وزیراعلیٰ پر اعتماد کا اظہار کرتے ہوئے قرارداد پیش کی۔

سپیکر پنجاب اسمبلی سبطین خان نے اعلان کیا کہ وزیراعلیٰ پنجاب پرویز الٰہی نے کامیابی سے اعتماد کا ووٹ لے لیا۔ پرویز الٰہی نے ایک بار پھر پنجاب اسمبلی میں اعتماد کا ووٹ حاصل کر لیا۔

صوبائی اسمبلی میں وزیراعلیٰ پنجاب پرویز الٰہی پر اعتماد کے اظہار کے لیے ووٹنگ کا عمل اختتام پذیر ہوگیا۔ وزیراعلیٰ پرویز الٰہی نے 186 ایم پی ایز سے اعتماد کا ووٹ لیا۔ سپیکر پنجاب اسمبلی سبطین خان نے اعلان کیا کہ وزیراعلیٰ پنجاب پرویز الٰہی نے کامیابی سے اعتماد کا ووٹ لے لیا۔

50% LikesVS
50% Dislikes

اپنا تبصرہ بھیجیں