شوبز فنکاروں کی جانب سے عمران خان کی ممکنہ گرفتاری پر غم وغصے کا اظہار

کچھ پاکستانی شوبز شخصیات پریشان ہیں کیونکہ ایسا لگتا ہے کہ پولیس تحریک انصاف پارٹی کے سربراہ عمران خان کو گرفتار کر سکتی ہے۔

تفصیلات کے مطابق عمران خان کے حامیوں میں پاکستان کے معروف فنکاروں کی بڑی تعداد شامل ہے جو موجودہ حکومت کے خلاف آواز اٹھاتے نظر آتے ہیں۔ سینئر پاکستانی شوبز اداکارہ اور پی ٹی آئی کی رکن صوبائی اسمبلی عتیقہ اوڈھو نے عمران خان کی ماضی کی تصویر انسٹاگرام پر شیئر کی اور ان کی سلامتی کے لیے دعا کی۔ عتیقہ اوڈھو کا کہنا تھا کہ ’عمران اور خان دونوں کے ساتھ سلوک کیا جاتا ہے، کوئی اس کا مستحق نہیں۔

سینئر اداکار عدنان صدیقی نے  ٹوئٹر پر اپنے خیالات کا اظہار کرتے ہوئے کہا کہ “انہوں نے ہر شعبے سے تعلق رکھنے والے افراد کو اس سے قبل کبھی اس جذبے کے ساتھ کسی لیڈر کیلئے اکھٹا ہوتے نہیں دیکھا”۔

گلوکار فرحان سعید نے ملکی صورتحال پر افسوس کا اظہار اور عمران خان کی حمایت کرتے ہوئے لکھا  کہ” جب عمران خان وزیرِ اعظم بنے تو بہت سے فنکاروں نے ان کی حمایت کی اور انہیں مبار کباد بھی دی یہاں تک کہ یہ لوگ ان سے ملاقات کرنے بھی گئے”۔فرحان سعید نے ساتھی فنکاروں کے ساتھ مایوسی کا اظہار کرتے ہوئے لکھا کہ” اب یا تو انہوں نے عمران خان کے بارے میں اپنی رائے بدل لی ہے جو کہ سب کا حق ہے یا  پھر وہ بولنے سے گھبرا رہے ہیں جو کہ ایک  تشویشناک بات ہے”۔

اداکارہ مایا علی نے بھی عمران خان کے ساتھ اظہار ِ یکجہتی کرتے ہوئے ان کی حفاظت کی دعا کی اور ان کے ساتھ کھڑے رہنے کا دعویٰ کیا۔

اداکار فہد مرزا نے لاہور کی کشیدہ صورتحال پر افسوس کا اظہار کرتے ہوئے لکھا کہ” اب وہ یہ ماننے پر مجبور ہوگئے ہیں کہ یہ شام ہے یہ لوگ عمران خان کو زہر دینا چاہتے ہیں جو ہفتوں اور مہینوں بعد اثر کرے گا”۔

یاد رہے کہ عمران خان کے ناقابل ِضمانت وارنٹ گرفتاری جاری ہونےکے پولیس اور رینجرز کی بھاری نفری گزشتہ رات سے زمان پارک میں عمران خان کی رہائش گاہ سے انہیں گرفتار کرنے کی کوشش کر رہی ہے تاہم انہیں پی ٹی آئی کارکنان اپنے قائد کی حفاظت کیلئے ڈٹے ہوئے ہیں جن کا کہنا ہے کہ پولیس کو ان کی لاش سے گزر کر عمران خان کو گرفتار کرنا ہوگا۔

50% LikesVS
50% Dislikes

اپنا تبصرہ بھیجیں