حکومت عوام کو مہنگی بجلی کا ایک اور جھٹکالگانے کو تیار

حکومت عوام کو بجلی کے مزید مہنگے بلوں کی صورت میں بڑا جھٹکا دینے کا منصوبہ بنا رہی ہے، جس میں کوئلے سے چلنے والے پلانٹس سے استعمال ہونے والی بجلی بھی شامل ہے۔

دنیا نیوز چینل کی رپورٹ کے مطابق جام شور پاور کمپنی نامی کمپنی نے نیپرا حکومت سے کوئلے سے بجلی کی قیمت میں 10 سے 12 روپے فی یونٹ اضافہ کرنے کا کہا ہے۔ وہ چاہتے ہیں کہ کوئلے سے بجلی کی پیداواری شرح 27 روپے 11 پیسے فی یونٹ مقرر کی جائے۔

سود کی رقم، انشورنس فیس، اور پاور پلانٹ کی تعمیر کے لیے قرض سے منسلک دیگر چارجز سبھی ٹیرف میں شامل ہیں۔ مثال کے طور پر، قرض پر سود کے لیے 3 روپے 18 پیسے ٹیرف میں شامل ہیں۔ قرض پر سود بھی 17 پیسے فی یونٹ ہے۔

Author

50% LikesVS
50% Dislikes

اپنا تبصرہ بھیجیں