تین رکنی بینچ کا فیصلہ آئین کے منافی ہوگا، شہباز شریف

وزیراعظم شہباز شریف کا کہنا ہے کہ سیاسی معاملات پر فل کورٹ نہ بننا بدقسمتی ہے، اس کی بجائے تین رکنی بینچ آئین کے منافی ہوگا۔

وزیراعظم نے کہا کہ چند کے علاوہ تمام سیاسی جماعتوں نے تین رکنی بینچ کو حمایت دینے سے انکار کر دیا ہے۔

انہوں نے کہا کہ تحریک انصاف کے دور میں سیاسی مخالفین کو بدترین انتقامی کارروائیوں کا نشانہ بنایا گیا ، سیکیورٹی اہلکار مریم نواز کے کمرہ میں داخل ہوئے ، مجھے بھی دو مرتبہ گرفتار کیا گیا جبکہ تیسری بار بھی گرفتار کرنے کی تیاری کی جارہی تھی۔

انہوں نے کہا کہ رانا ثنااللہ اور حمزہ شہباز شریف سمیت ن لیگ کی پوری مرکزی قیادت زیر عتاب رہی ہے۔ 

وزیر اعظم نے کہا ہے کہ سابق حکومت سیاسی مخالفین کی پگڑیاں اچھالتی رہی، شہزاد اکبر روزانہ پریس کانفرنس کر کے نئے جھوٹ گھڑتے تھے ۔

Author

50% LikesVS
50% Dislikes

اپنا تبصرہ بھیجیں