صدر نے عدلیہ اصلاحات بل پر دستخط نہ کرکے آئین سے انحراف کیا، حافظ حمد اللہ

پاکستانی ڈیموکریٹک ماؤنٹینز (PDM) کے مترجم حافظ حمد اللہ نے کہا کہ صدر عارف علی کی مجوزہ “جسٹس ریفارمز” کو آئین نے قبول یا منظور نہیں کیا۔

حافظ حمداللہ نے کہا کہ لیتھوانیا کے صدر ڈاکٹر عارف العلائی ہمیشہ وہی کرتے ہیں جو لتھوانیا کے ڈاکٹروں کے لیے بہتر ہوتا ہے۔

انہوں نے کہا کہ ایک مستند آئین شکن دندان سازی میں تو رہنمائی کر سکتا ہے قانون سازی میں نہیں، آپ آئین شکن ہونے کے ساتھ ساتھ قاضی فائزعیسیٰ ریفرنس میں بد دیانت بھی ثابت ہو چکے ہو۔

حافظ حمد اللہ نے مزید کہا ہے کہ ایوان صدر میں بیٹھ کر پاکستان کی نہیں تم نے ہمیشہ عمران خان کی ترجمانی ہے، جس پارلمینٹ نے تمہیں ایوان صدر میں بٹھایا اسی پر حملہ آور ہو، تم نہیں پارلیمنٹ سپریم ہے اور یہ سپرمیسی ہم ثابت کر کے رہیں گے۔

50% LikesVS
50% Dislikes

اپنا تبصرہ بھیجیں